The Latest

وحدت نیوز (اسلام آباد) یوم شہادت حضرت علی علیہ السلام کے سلسلے میں ملک دنیا بھر کی طرح پورے ملک میں عزاداری کے جلوسوں کا سلسلہ جاری ہے جن میں وحدت سکاوٹس اور وحدت یوتھ سیکورٹی کے فرائض سر انجام دے رہے ہیں۔کراچی، اسلام آباد،لاہور،ملتان،فیصل آباد ، پشاور ، کوئٹہ ،پاراچنار،ہنگو،ڈیرہ غازی خان،گلگت وبلتستان، سمیت ملک کے مختلف شہروں میں شہادت امیر المومنین علیہ السلام کے سلسلہ میں مرکزی جلوس آج 21 رمضان المبارک کو برآمد ہوں گے جن میں مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی و صوبائی رہنما شرکت کریں گے۔جلوس کے تمام داخلی و خارجی راستوں کی نگرانی کے لیے وحدت سکاوٹس کو اپنے اپنے علاقوں میں ذمہ داریاں تفویض کر دی گئیں ہیں۔

 مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی و صوبائی رہنماوں نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ جلوسوں کی حفاظت پر مامور انتظامیہ کے افسران و اہلکاروں کے ساتھ مکمل تعاون کیا جائے گا تاہم اس بات کا خیال رکھا جائے کہ جلوس میں شریک ہونے والے سوگواران کی راہ میں سیکورٹی کے نام پر رکاوٹ یا مشکلات نہ پیدا کیں جائیں۔انہوں نے قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مطالبہ کیا ہے کہ جلوسوں کے تمام روٹس کی قبل از وقت مکمل چیکنگ کی جائے اور مشکوک نقل و حرکت پر کڑی نظر رکھی جائے۔دریں اثناء شہر قائد مرکزی جلوس یوم علی علیہ السلام کی مناسبت سے مجلس عزاء ٹھیک 10:30بجے صبح نشترپارک میں شروع ہو جائے گی جس سے خطابت علامہ ماجد رضا عابدی کریں گے جبکہ نماز ظہریں دوران مرکزی جلوس امام بارگاہ علی رضا ایم اے جناح روڈ پر 1:30 بجے دوپہر مولانا ڈاکٹر نسیم حیدر زیدی کی اقتداء میں ادا کی جائے گی بعد نماز ظہریں امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی جانب سے دہشتگردی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا ۔جبکہ مرکزی جلوس کی قیادت بو طراب اسکاؤٹس کرے گی اس کے علاوہ مرکزی جلوس عزاء کے داخلی و خارجی راستوں پر اسکا ؤٹس رابطہ کونسل ،وحدت اسکاؤس ،امامیہ اسکاؤٹس سمیت دیگر اسکاؤس گروپس کے5ہزار سے زائد رضا کار سکیورٹی کے فرائض انجام دیں گے۔جلوس کے روٹس نشتر پارک ،نمائش چورنگی ،سی بریز،امپریس مارکیٹ ،ریگل چوک ،تبت سینٹر،ریڈیو پاکستان،بولٹن مارکیٹ ،لائٹ ہاؤس ،خوجہ مسجد کھارادر سے ہوتا ہوا حسینیہ ایرانیہ پر اختتام پذیر ہوگا ۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کےفلاحی ادارے خیر العمل فاونڈیشن ضلع ملیر کی جانب سے رمضان المبار ک کی مناسبت سے ۳۰۰ مستحق گھرانوں میں راش تقسیم کیا گیا، تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز وحدت ہاوس ملیر میں مستحق اور غریب گھرانوں میں راش تقسیم کرنے کی تقریب منعقد کی گئی جس میں علماٗ کرام اور برادران نے شرکت کی ، تقریب کے آغاز میں ایم ڈبلیو ایم ضلع ملیر کے ڈپٹی سیکریٹری  جنرل مولانا غلام محمد فاضلی نے دعا کروائی جبکہ اس موقع پر ایم ڈبلیو ایم کراچی ڈویژن کے  ڈپٹی  سیکریٹری  جنرل مولانا نشان حیدر ساجدی ، مولانا غلامحمد جعفری(مدرس جامعہ امام خمینیؒ) ، مولانا منصور روحانی (خطیب مسجد نادعلی پپری گوٹھ)، شیعہ علما کونسل کے مولانا رحمت علی (خطیب  جامع مسجد ماروی گوٹھ) ، آغا محمد حسین مطہری سیکریٹری شعبہ تبلیغات ضلع ملیرسمیت ضلعی سیکریٹری جنرل ثمر عباس اور  ضلعی و یونٹ کابینہ کے اراکین موجود تھے، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مولانا غلام محمد فاضلی نے کہا کہ خیر العمل فاونڈیشن کی جانب سے مستحق گھرانوں میں راشن کی تقسیم کا عمل قابل ستائش ہے جو گذشتہ کئی سالوں سے جاری ہے اور اس سفر کو مزید آگےتک لے کرجانا ہے، انہوں نے کہا کہ اللہ کی خوشنودی کے لئے مخیرحضرات کے تعاون سے آج ۳۰۰ گھرانوں کی ادنا سی مدد کررہے ہیں انشاءاللہ آئندہ ہزار لوگوں کو بھی اسطرح مستفید کرتے رہیں گے۔اس موقع پر ایم ڈبلیو ایم ضلع ملیر کے سیکریٹری جنرل ثمر عباس نے بتایا کہ خیر العمل فاونڈیشن کی جانب سےسالہائے گذشتہ کی طرح اس سال بھی تین سو خاندانوں میں رمضان راشن بیگ تقسیم کیئے گئے ہیں جن کا کل تخمینہ تقریباً ساڑھے چار لاکھ روپے ہےجبکہ مزید مستحقین کو بھی دینے کی کوشش کی جارہی ہیں۔

وحدت نیوز(گلگت ) دہشت گردی کے ناسور کا علاج کم قیمت پر ممکن ہے لیکن نااہل حکمرانوں کی جانبداری نے اس کاعلاج ناممکن بنادیاہے ۔دہشت گردی کے خلاف سالہا سال سے قربانیاں دینے کے باوجود ملک میں امن کا قائم نہ ہونا لمحہ فکریہ ہے ، اہل تشیع کی ٹارگٹ کلنگ روکنا شاید حکومت کی ترجیحات میں شامل نہیں۔مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی کوارڈینٹر خواہر سائرہ ابراہیم نے کہا ہے کہ ملک میں جاری شیعہ ٹارگٹ کلنگ پر حکومت تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے اور مٹھی بھر دہشت گردوں کو لگام دینے میں حکومت کی کوئی دلچسپی نظر نہیں آرہی ہے۔وہ آج یوم سیاہ کے موقع پر خواتین ونگ کی جانب سے ملک میں دہشت گردی کے خلاف نکالی جانیوالی ریلی کے شرکاء سے خطاب کررہی تھی۔انہوں نے کہا کہ مظلوموں کے حامی و ناصر علامہ راجہ ناصر عباس حکمرانوں کی دوغلی پالیسی کے خلاف ایک مہینے سے بھوک ہڑتال کئے ہوئے ہیں اور حکومت روایتی بے حسی کا مظاہر کررہی ہے جو اس ملک کے ہزاروں شہداء کے خون کی تضحیک ہے ۔مجلس وحدت مسلمین کے رہنماؤں کی بھوک ہڑتال سیاست چمکانے کیلئے نہیں بلکہ بے حس حکمرانوں کو جھنجوڑنے اور دہشت گردوں سے اس ملک کو پاک کرنے کی غرض سے ہے۔ہمیں اس ملک کے اسی ہزاربے گناہ شہیدوں کی حمایت حاصل ہے ،ہم دہشت گردی کا مقابلہ کرتے ہوئے شہید ہونے والے جوانوں کے پیغام کو قریہ قریہ پہنچائیں گے۔انہوں نے کہا کہ وہ دن دور نہیں جب اس مادروطن کے عوام بیدار ہونگے اور ملک کو بد امن بنانے والوں اور قومی خزانے سے ہاتھ صاف کرنے والوں کا احتساب کرینگے اور ایک فلاحی ریاست کی تعمیر کرینگے۔انہوں نے کہا کہ ہمارے پرامن کو کمزوری سمجھنے والے احمق ہیں عید کے بعد پرامن لانگ مارچ سے حکمرانوں کی نیندیں اڑ جائینگی۔انہوں نے مزید کہا کہ گلگت میں شیعیان علی پر عرصہ حیات تنگ کیا جارہا ہے ہماری زمینوں پر قبضے کئے جارہے ہیں ہمارے جوانوں پر بلاجواز مقدمات قائم کرکے جیل کی سلاخوں میں دھکیل دیا گیا ہے۔دوسری طرف سانحہ مئی 1988 سے تاایندم شیعیان علی کے خون سے ہاتھ رنگنے والوں کو گرفتار کرنے کی بجائے انہیں ترقیاں اور انعامات سے نوازا گیا ہے۔اگر زیادتیوں کے یہ سلسلے جاری رہے تو ہمارے صبر کا پیمانہ لبریز ہوگا اور حکمرانوں کی نابودی تک ہمارا احتجاج جاری رہے گا۔

وحدت نیوز (گلگت) کھانے کی خواہش تو درکنارکاچو امتیاز کے ہاتھ سے نہ تو مٹھائی کھائی ہے اور نہ ہی انہیں مبارکباد پیش کی ہے، میرے حوالے سے اخبار میں چھپنے والی خبر سراسر جھوٹ پر مبنی ہے۔مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی رہنما و رکن صوبائی اسمبلی بی بی سلیمہ نے اخبار میں چھپنے والی خبر کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ کاچو امتیاز کی جانب سے پیش کی جانیوالی مٹھائی کھانا تو درکنار اس کی بو سونگھنا بھی ہمیں گوارا نہیں۔کاچو امتیاز اپنی جماعت سے بیوفائی کے مرتکب قرار پائے ہیں اور مجلس وحدت کے رکن اسمبلی کی حیثیت سے میں اپنی جماعت کے ہر اقدام اور فیصلے سے انحراف کرنا اپنی توہین سمجھتی ہوں۔انہوں نے کہا کہ موصوف اپنے بیان اور موقف کو بدلنے میں کوئی دقیقہ فروگذاشت نہیں کرتے اور مذکورہ خبر جان بوجھ کر میری ساکھ کو متاثر کرنے کی غرض سے چھپوائی ہے جوسراسر جھوٹ پر مبنی ہے۔انہوں نے کہا کہ سپیکر کے فیصلے سے سچائی کو شکست اور جھوٹ و مکاری فتح سے ہمکنار ہوئے ہیں۔اپوزیشن لیڈر جناب شاہ بیگ کے عہد و پیمان پر قائم رہنے کوایمانداری اور دیگر کے اپنے ضمیر کو بیچنے پر شور شرابا کرنے والوں کی زبان آج کیوں بند ہوئی ہے جبکہ اپوزیشن لیڈر نے اپنے عہد و پیمان پر کاربند رہ کر ایک مثال قائم کی اور کاچو امتیاز نے پہلے تو اپنے ضمیر کا سودا کیا اور پھر پارٹی قیادت کے سامنے اپنی غلطی کو تسلیم کرکے استعفیٰ پیش کردیا اورپھر خود ہی اپنے پیش کردہ استعفیٰ سے منکر بھی ہوگئے جوکسی مسلمان کے شایان شان نہیں۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کے زیراہتمام راولپنڈی سے ایک ریلی برآمد کی گئی، جو نیشنل پریس کلب اسلام آباد تک نکالی گئی۔ ریلی کا مقصد مجلس وحدت مسلمین کے سربراہ علامہ ناصر عباس جعفری کی حمایت کرنا تھا۔ اس موقع پر چھوٹی بچیوں نے پلے کارڈ اور بینرز بھی اٹھا رکھے تھے، جن پر دہشتگردی کے خلاف نعرے درج تھے۔ خواتین رہنماوں کا کہنا تھا کہ وہ علماء کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑی ہیں، اگر قیادت کی طرف سے حکم ہوا تو راولپنڈی شہر سے ایک بڑی تعداد میں خواتین کو جمع کرکے اسلام آباد لاسکتی ہیں۔ اس ریلی کا مقصد اپنے قائدین سے اظہار یکجہتی کرنا ہے اور حکومت پر واضح کرنا ہے کہ ہمیں کمزور نہ سمجھا جائے۔ خواتین رہنماوں نے حکمرانوں کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے مطالبہ کیا کہ علامہ ناصر عباس کے تحفظات کو دور کیا جائے اور مطالبات تسلیم کئے جائیں۔ خواتین کی ریلی سے علامہ ناصر عباس جعفری نے بھی خطاب کیا اور ریلی کی شرکاء کا شکریہ ادا کیا۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین کے زیر اہتمام سربراہ ایم ڈبلیو ایم علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی بھوک ہڑتال تحریک کو نو دن مکمل ہونے پر اظہار یکجہتی کے لئے ،مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی جانب سے خراسان سے نمائش چورنگی تک ریلی نکالی گئی جس میں خواتین اور بچون نے بڑی تعداد کی شرکت،مظاہریں ہاتھوں میں ملک میں جاری شیعہ ٹارگٹ کلنگ کیخلاف پلے کارڈ تھامے حکومت کیخلاف نعرے لگاتے رہے،علمائے کرام ،ذاکرین،سول سوسائٹی اور مختلف مکاتب فکر کے رہنماوں کی شرکت،مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مولانا علی انور، علی حسین نقوی ،مولانا صادق تقوی  اور ایم ڈبلیو ایم شعبہ خواتین مرکزی رہنما خانم زہرا نقوی کا کہنا تھا کہ ملک میں نہ رکنے والی شیعہ نسل کشی کیخلاف ہم پرامن طور پر میدان میں نکل چکے ہیں انشااللہ ہماری یہ تحریک ظالموں کو انجام تک پہنچانے تک جاری رہیگی،ملت جعفریہ گذشتہ نو دنوں سے پاکستان سمیت دنیا بھر میں سراپا احتجاج ہیں،ہمیں افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ بے حس حکمرانوں اور ریاستی اداروں کے کان پر جوں تک نہیں رینگی،ہم انصاف لئے بغیر گھروں کو نہیں لوٹیں گے،اور ہم اپنے احتجاج کا دائرہ وسیع کریں گے،انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کی بے حسی اس بات کی دلیل ہے کہ وہ ملت جعفریہ کیخلاف ان کاروایوں میں شریک ہیں،ہمیں حق لینے کے لئے جان کی قربانی بھی دینی پڑے تو ہم اس کے لئے تیار ہیں،لیکن اپنے اوپر ہونے والے ظلم و بربریت پر خاموش نہیں رہیں گے۔

خانم زہرا نقوی نے اپنے خطاب میں کہا کہ حکمران سن لیں ہم مزید ظلم سہنے کے لئے تیار نہیں،ہمارے ہزاروں شہداء کے قاتلوں کی سرپرستی چھوڑ دیں،اور مصلحت پسندی کے خول سے باہر نکلیں،ملک بھر میں جاری شیعہ نسل کشی ایک منظم منصوبہ بندی کا حصہ ہے جس سے ہم بخوبی واقف ہیں،علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی بھوک ہڑتال اور احتجاج مظلوم پاکستانیوں کو انصاف دلانے کے لئے ہیں،ہم نے پرامن احتجاج کرکے شدت پسندی کیخلاف علم بغاوت بلند کی ہے اور است منطقی انجام تک پہنچا کر دم لیں گے،قوم ہمارے احتجاجی تحریکوں سے بخوبی واقف ہیں،خانم زہرا نجفی کا مزید کہنا تھا کہ پاکستانیوں کا قتل عام کرنے والے درندہ سفت دہشت گردوں کو ماضی میں بدقسمتی سے ہمارے ریاستی اداروں کی مکمل سرپرستی حاصل رہی جس کا خمیازہ آج قوم بھگت رہی ہے،بدترین آمر جنرل ضیاء کے پالے یہ دہشت گرد آج قائد اور اقبال کے پاکستان کو تباہ کرنے کے درپے ہیں،اقتدار کی نشت میں دھت آمروں نے اپنی کرسی بچانے کے لئے ایسے درندوں کو پالا آج پاکستان میں کوئی مکتبہ فکر و مذاہب کے لوگ محفوظ نہیں،آپریشن ضرب عضب کے نام پر قوم کو بیووقوف بنایا جارہا ہے،پاکستان میں ملت جعفریہ کی نسل کشی میں انہی عناصر کا کلیدی کردار ہے جو کبھی ریاستی اداروں کے منظور نظر تھے،آج علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی احتجاجی تحری کی حمایت میں نہ صرف پاکستان بلکہ دنیا بھر میں بسنے والے پاکستانی سڑکوں پر موجود ہیں،ہم مزید لاشیں اٹھانے کے متحمل نہیں،انشاللہ ہم اپنے مطالبات کی منظوری تک سڑکوں پر رہیں گے اور اپنے پر امن جدوجہد کو جاری رکھیں گے ۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین کےڈویژنل سیکریٹریٹ میں شعبہ خواتین کا اہم تنظیمی اجلاس ہوا.اجلاس مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین پاکستان کی سیکریٹری جنرل خانم زہراء نقوی کی سربراہی میں منعقد کیا گیا.اجلاس میں صوبہ سندھ کی رکن کمیٹی خواہر ہماء جعفری اور سیدہ ثناء نے بھی شرکت کی.اجلاس کا آغاز تلاوت قرآن سے کیا گیا جسکے بعد "خواتین کا معاشرے میں کردار"عنوان پر خانم زہراء نے خطاب کیا۔ ان کاکہنا تھا کہ معاشرے کی ترقی و کامیابی میں عورت کا کردار نہایت کلیدی ہوتا ہے کیونکہ خدا نے عورت کو تربیت کرنے کا ہنر دیا ہے جب ایک عورت اپنے بچوں کی بہترین تربیت کرسکتی ہےگھر کے نظام کو منظم انداز سے چلا سکتی ہے تو یقیناً وہ ایک معاشرے کو بھی بہترین بنانے میں اپنا کردار ادا کرسکتی ہے لہذا ہمیں اجتماعی فرائض سے ہرگز غفلت نہیں برتنی چاہیےکونکہ ہمیں اسی معاشرے میں تحریک مہدویت کو فروغ  دینا ہے اس ہی معاشرے میں تحریک مہدویت کے لیے زمین ہموار کرنی ہے اسکے لیے ہمیں ایک مقصد ایک ہدف ایک منشور جو قرآن و اہلبیت کے پیغامِ وحدت سے آراستہ ہو کہ تحت سب کو ساتھ لے کر چلنا ہوگا اور اپنا کردار ادا کرنا ہوگا.اجلاس کے دوسرے مرحلے میں تنظیم سازی کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا جس کے بعد کراچی میں ضلعی سسٹم تشکیل دیا گیا اور چھ اضلاع قائم کیے گئے .دوسرے مرحلے میں ضلعی اراکین کا انتخاب کیاگیا اور ذمہ داریاں دی گئیں .اجلاس کے آخرمیں مرکزی سیکرٹیری فلاح و بہبود علامہ باقر زیدی نے "تنظیم کی ضرورت و افایت"کے عنوان پر خطاب کیا اور سوالات کے جوابات دیے.اجلاس کااختتام دعائے سلامتی امام مانہ عج سے کیا گیا.

وحدت نیوز (لاہور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان شعبہ خواتین ضلع لاہور کی خواہر لبنیٰ زیدی کو اگلے تین سال کے لئےسیکرٹری جنرل منتخب کیا گیا ہے ،ایم ڈبلیو ایم پاکستان شعبہ خواتین کی مرکزی سیکرٹری جنرل محترمہ سیدہ زہرہ نقوی صاحبہ نے خواہر لبنیٰ زیدی کو اگلے تین سال کے لئے ضلع لاہور کی سیکرٹری جنرل منتخب ہونے پر مبارک باد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ خواہر لبنیٰ زیدی نےنہایت ہی مشکل حالات میں اس سنگین ذمہ داری کو قبول کیا ہے ،ٍاللہ تعالیٰ سے دعا ہے کہ بحق ائمہ معصومین ان کی توفیقات خیر میں اضافہ فرمائے اور ہمیں امید ہے کہ خواہر اپنی تمام تر مصروفیات کے باوجود اسی ہفتے اپنی کابینہ کو مکمل کرلیں گی اور اس کا باقاعدہ اعلان بھی کیا جائے گا ۔اس سے قبل خواہر لبنیٰ زیدی پنجاب میں  ایک فعال اور مخلص کارکن کے طور پر مجلس وحدت مسلمین پاکستان شعبہ خواتین میں اپنی خدمات انجام دے چکی ہیں ۔ انشاءاللہ خواہر بھر پور عزم حوصلے کے ساتھ اس سفر کو جاری رکھیں گی ،مجلس وحدت مسلمین پاکستان مظلوم محروموں کی آواز ہے،ہم کبھی بھی کسی ظالم کے سامنے نہیں جھکیں گے۔ اور اپنا سفر جاری و ساری رکھیں گے ۔ہم اپنے قائد وحدت کے شانہ بہ شانہ میدان عمل میں حاضر رہیں گے انشاءاللہ۔

وحدت نیوز (گلگت) وزیر جنگلات جنا ب حاجی محمد وکیل کی ناگہانی موت پر غمزہ خاندان کے غم میں شریک ہیں،خدا پسماندگان کو صبر جمیل عطا فرمائے اور مرحوم کو اپنی رحمت کے سائے میں جگہ عنایت فرمائے۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان شعبہ خواتین کی رہنما و رکن اسمبلی بی بی سلیمہ نے حاجی محمد وکیل کی اچانک فوتگی پر غمزہ خاندان کو تعزیت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ دکھ کی اس گھڑی میں غمزدہ خاندان کے ساتھ شریک ہیں،خدا پسماندگان کو مصیبت کے اس عالم میں صبر جمیل عطا کرے اور مرحوم کی مغفرت فرمائے۔موت ایک حقیقت ہے جس سے انکار ناممکن ہے ہر ذی حیات کو موت کا ذائقہ چکھنا ہے اور انسان کی ترقی کا سفر اصل میں موت کے بعد ہی شروع ہوتا ہے لیکن افسوس کہ اس راز سے ہمیں واقفیت نہیں اور موت سے خوف اور ڈر محسوس ہوتا ہے۔حاجی محمد وکیل کے اچانک رخصت ہونے سے ایک خلا ضرور پیدا ہوااور اس کی جگہ کوئی دوسرا نہیں لے سکتا۔ہماری دعا ہے کہ خدا وند تعالی مرحوم کی جملہ کوتاہیوں کی مغفرت فرمائے اور پسماندگان کو صبر جمیل عطا کرے۔

وحدت نیوز (کمب) خیر العمل فائونڈیشن شعبہ ویلفیئرمجلس وحدت مسلمین تعلقہ کوٹ ڈیجی  کے تحت ایک روزہ فری میڈیکل اور بلڈ ٹیسٹ کیمپ پرائمری اسکول کمب میں لگایا گیا، میڈیکل کیمپ کا باقائدہ افتتاح ایم ڈبلیوایم کے رہنما اور پرنسپل مدرسہ امام علی ؑعلامہ نقی حیدری نے کیااور اجتماعی دعائے خیر ادا کی گئی،تفصیلات کے مطابق ایک روزہ اس فری میڈیکل میں ماہر ڈاکٹرز کی زیر نگرانی  546مریضوں کا معائنہ کیا گیااور بلڈ ٹیسٹ کیا گیا، رپورٹس کے مطابق 32مریضوں میں ہیپاٹائٹس جیسے موزی مرض کا انکشاف ہوا،کیمپ کے اختتام پر ایم ڈبلیوایم کی جانب سے فاتمید فائونڈیشن پاکستان کو تھیلسمیاکے مریضوں کیلئے12خون کے بیگ عطیہ کیئے گئے۔

Page 86 of 101

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree