وحدت نیوز(اسلام آباد) منہاج القرآن انٹرنیشنل کے سربراہ حسن محی الدین قادری اور پاکستان عوامی تحریک کے مرکزی سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈا پور نے اپنے اعلی سطح وفد کے ہمراہ ایم ڈبلیو ایم کے احتجاجی کیمپ میں مجلس وحدت مسلمین کے سربراہ علامہ راجہ ناصرعباس سے ملاقات کی اور انہیں اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا۔انہوں نے کہا کہ علامہ ناصر عباس کی ملت تشیع کے لیے جدوجہد مثالی ہے۔ان کے مطالبات شیعہ کیمیونٹی کے لیے محض ایک کاغذی دستاویز نہیں بلکہ پاکستان کی سالمیت و بقا کے لیے ایک موثر اور مکمل لائحہ عمل ہے ۔ پاکستان کی ایک بڑی مذہبی و سیاسی جماعت کے رہنما کی گزشتہ بیس روز سے جاری بھوک ہڑتال پر حکومت کی مسلسل بے حسی نون لیگ کے اقتدار کے لیے خطرناک ثابت ہو سکتی ہے۔بعد ازاں دونوں جماعتوں کے رہنماوں نے میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ ہم مظلوموں کی حمایت کا اعلان کرنے اس کیمپ میں آئے ہیں۔اہل تشیع کے ساتھ ظلم و بربریت کا کھیل بند کیا جائے۔نیشنل ایکشن پلان کو حکومت اپنے سیاسی حریفوں سے انتقام لینے کے لیے استعمال کر رہی ہے۔اس قانون کی آڑ میں ملت تشیع پر مقدمات قائم کیے جا رہے ہیں جب کہ جن کے خلاف یہ قانون بنا تھا وہ مذموم عناصر دندناتے پھر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ظالموں کے خاتمے اور انصاف کے حصول کے لیے ہم مجلس وحدت مسلمین کے ساتھ کھڑے ہیں ۔

علامہ ناصر عباس جعفری نے وفد کی آمد پرشکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں تکفیری نظریہ کا پاکستان نہیں چاہیے۔ اس ملک سے انتہا پسندی کی سوچ کے خاتمے تک ہماری جدوجہد جاری رہے گی۔ ہم نے اس مادر وطن کو قائد واقبال کے خوابوں کی تعبیر کی عملی شکل دینی ہے جس میں ہر ایک کو بلاتخصیص مذہب و مسلک انصاف حاصل ہو۔ جہاں رواداری اور مذہبی آزادی ہو ۔انہوں نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان کی سمت تبدیل کر کے ملک بھر میں انارکی پیدا کرنے کی دانستہ کوشش کی جا رہی ہے۔مظلوم اور بے گناہ افراد پر نیپ کے نام مقدمات قائم کیے جا رہے ہیں ۔ریاستی سرپرستی میں ہمارے لوگوں کو اپنی زمینوں سے بے دخل کیا جا رہا ہے۔پارہ چنار میں ایف سی اہلکاروں نے فائرنگ کر کے ہمارے نوجوانوں کو شہید کر دیا۔حکومت اپنی آئینی ذمہ داریاں ادا کرنے کی بجائے دہشت گردی پر اتر آئی ہے۔ہمارے لیے یہ متعصبانہ طرز عمل نا قابل قبول ہے۔جب تک ہمارے مطالبات پر عمل درآمد نہیں ہو تا تب تک ہمارا یہ احتجاجی کیمپ قائم رہے گا۔انہوں نے کہا پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان اس کیمپ میں ہمارے ساتھ اظہار یکجہتی کرنے آئے۔انہوں نے جو وعدے کیے ان پر عمل درآمد میں خیبر پختوانخواہ حکومت پس و پیش کا مظاہرہ کر رہی ہے جو نامناسب اور غیر اخلاقی ہے۔ عمران خان کو اس کا فوری نوٹس لینا چاہیے۔

وحدت نیوز (ملتان) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے وفد نے ملتان میں پی آئی اے کے ملازمین کی جانب سے نجکاری اور کراچی میں ہونے والی شہادتوں کے خلاف دیے گئے احتجاجی دھرنے میں شرکت کی۔ وفد کی قیادت صوبائی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ سید اقتدار حسین نقوی، صوبائی سیکرٹری تعمیر ملت زوہیب حسین، ضلعی سیکرٹری جنرل علامہ قاضی نادر حسین علوی نے کی۔ اس کے علاوہ وفد میں سیکرٹری سیاسیات انجینیئر مہر سخاوت، سید وسیم عباس زیدی، سید جاوید حسین الحسینی، سرائیکستان نوجوان تحریک کے چیئرمین مہر مظہر عباس کات، سید دلاور عباس زیدی، علی رضا بخاری اور ثقلین نقوی شامل تھے۔ اس موقع پر علامہ اقتدار حسین نقوی نے پی آئی اے کے رہنمائوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین ہر مظلوم کے ساتھ ہے، جس طرح یہ حکومت کسانوں، مزدوروں، ورکروں اور دیگر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے دیگر افراد کے حقوق غصب کر رہی ہے یہی اس کی تباہی کا سبب بنے گا۔ اُنہوں نے کہا کہ اگر قوم ڈاکٹر طاہرالقادری اور عمران خان کا دھرنے میں ساتھ دیتی تو معاملہ اس حد تک نہ پہنچتا، کراچی میں پی آئی اے کے ملازمین کی شہادت اس حکومت کے تابوت میں آخری کیل ثابت ہوگا۔ اس موقع پر علامہ قاضی نادر حسین علوی نے کہا کہ یہ حکومت ظلم پہ ظلم کر رہی ہے، آج اس ملک کے ہر ادارے کو بیچنے کی بازگشت ہو رہی ہے، یہ حکمران اگر واقعی ملکی اداروں سے مخلص ہیں تو کرپٹ افراد کے خلاف کاروائی کریں، ان حکمرانوں سے نئے اداروں کے بننے کی کوئی اُمید نہیں ہے۔ اس موقع پر علامہ اقتدار نقوی نے کراچی میں شہید ہونے والے ملازمین کے ایصال ثواب کے لیے فاتحہ خوانی کی اور زخمیوں کی صحتیابی کے لیے دعا کرائی۔

وحدت نیوز (کوئٹہ) مجلس وحدت مسلمین کوئٹہ ڈویژن کے سیکریٹری جنرل عباس علی نے پی آئی اے ملازمین پر تشدد کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ احتجاج کرنے والوں پر تشدد جمہوریت کی پامالی کے مترادف ہے۔ پی آئی اے کے ملازمین آئین و قانون کی خلاف ورزی نہیں کر رہے تھے۔ احتجاج ہر شہری کا قانونی حق ہے انہوں نے ان خیالات کا اظہار پی آئی اے ملازمین پر کئے گئے تشدد اور قتل کے رد عمل میں کیا انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کو چاہئے کہ طاقت کے استعمال کی بجائے بات چیت سے مسئلے کے حل تک پہنچے ،انہوں نے پی آئی اے ملازمین کی ہلاکت پر افسوس کا اظہار کیا اور کہا کہ حکومت اس واقع کی مذمت کرے اور ساتھ ہی ساتھ ذمہ داران کو ان کے انجام تک پہنچائے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پی آئی اے کی نجکاری کی ضد چھوڑ دے اور ان سے بات چیت کرکے ان کے مطالبات کی منظوری کیلئے کام کرے۔ ہر روز ملک کو کروڑوں کا نقصان اٹھانا پڑ رہا ہے۔پی آئی اے ملازمین کے ساتھ گولی اور ڈنڈوں سے نہیں بلکہ افہام وتفہیم سے بات چیت کی جائے۔بیان میں کہا گیا کہ احتجاج ہر پاکستانی کا جمہوری حق ہے اور مجلس وحدت مسلمین حکومت کی آمرانہ سوچ اور عمل کی مذمت کرتے ہوئے پی آئی اے ملازمین کی بھر پور حمایت کرتی ہے اور حکمرانوں سے مطالبہ کرتی ہے کہ پی آئی اے کو اس اسٹیج پر پہنچانے والوں کے خلاف کاروائی کرے۔ بیان کے آخر میں ہلاک ہونے والے پی آئی اے ملازمین کے اہل خانہ سے دلی ہمدردی کا اظہار کیا گیا اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کی گئی۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین کراچی کے سیکرٹری سیاسیات علی حسین نقوی نے پی آئی اے ملازمین پر ریاستی تشدد کی مذمت کرتے ہوئے بے گناہ افراد کے قتل کی ذمہ داری وفاق و صوئی حکوموتوں کو قرار دیا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جناح انٹر نیشنل ایئر پورٹ پی آئی اے ہیڈ آفس کے سامنے جوانٹ ایکشن کمیٹی کی جانب سے دیئے جانے والے احتجاجی دھرنے سے خطاب میں کیاان کا کہنا تھا کہ پی آئی اے مزدوروں کی ملکیت ہے ادارے کی ترقی میں مزدوروں کو خون شامل ہے شہید ہونے والے ملازمین نے قومی اساسے کو تباہ ہونے سے بچانے کی خاطر اپنی جانوں کا نظرانہ پیش کیا ہے قومی ادارے کی نجکاری کے خلاف ہیں بے گناہ انسانی جانوں پر ریاستی جبر کی نئی داستان رقم کی گئی ہے قومی ایئر لائن کی نجکاری سے ہزاروں افراد کے گھروں کے چولے بجھ جائیں گے جس کی ان حکمرانوں کو اجازت نہیں دی جائے گی ان کا کہنا تھا کہ پر امن مظاہرین پر گولیاں چلانے والوں کو فوری گرفتار کیا جائے بے گناہ افراد کے قتل کی ذمہ داری وفاق و صوئی حکوموتوں پرعائد ہوتی ہے قاتلوں کی گرفتاری کیلئے جلد عدالتی کمیشن تشکیل دیا جائے اور ملزمان کو فوری گرفتار کیا جائے۔دریں اثناء ایم ڈبلیو ایم کے کراچی رہنماؤں علامہ علی انور ،علامہ مبشر حسن ،سید رضا امام نقوی،حیدر زیدی ،احسن عباس کے وفد نے ورکرزیونین کے عہدیداروں سہیل بلوچ ،صفدر انجم و دیگر سے ملاقات کی اور اپنے بھر پور تعاون کی یقین دہانی کرائی ملاقات میں گزشتہ روز احتجاج میں جاں بحق ہونے والے ملازمین کی بلندی درجات کیلئے فاتحہ خوانی اور زخمیوں کی جلد صحتیابی کیلئے دعاکی گئی ۔

Page 1 of 2

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree