وحدت نیوز (اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کا تین روزہ مرکزی تنظیمی سالانہ کنونشن کا آغازآج 6اپریل سے جامع الصادق جی نائن اسلام آباد میں ہو رہا ہے۔کنونشن میں شرکت کے لیے بلوچستان،سندھ،گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر سمیت پاکستان کے مختلف شہروں سے رہنماؤں اور تنظیمی کارکنوں کی آمد کا سلسلہ شروع ہو چکا ہے۔کنونشن میں صوبائی و ضلعی رہنماؤں کی جانب سے اپنے اپنے علاقوں کی تنظیمی کارکردگی پر رپورٹس پیش کی جائیں گی۔8اپریل کنونشن کے آخر سیشن پر بعنوان وحد ت اسلامی اور استحکام پاکستان سیمینار کا انعقاد کیا جائے گا ،سیمینارمیں ملک کے نامور شیعہ سنی علما اورسیاسی اکابرین شریک ہوں گے اور عصر حاضر میں امت مسلمہ کے مابین وحدت و اخوت کی ضرورت اور پاکستان کے استحکام پر گفتگو کی جائے گی۔کنونشن کے اختتام پر پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں سے خطاب بھی کیا جائے گا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) سینٹرل سیکرٹریٹ مجلس وحدت مسلمین پاکستان میں مرکزی کنونشن کے حوالے سے برادر نثار فیضی چیئرمین کنونشن کی زیر صدارت مرکزی کور کمیٹی  کا اہم اجلاس منعقد ہواجس میں مرکزی کنونشن کی تمام انتظامی کمیٹیوں کے ذمہ داران نے شرکت کی ۔ مرکزی کنونشن اس سال حسب سابق  8٬7٬6 اپریل کو  جی نائن ٹو امام الصادق ٹرسٹ اسلام آ باد میں منعقد ہو گا مرکزی کنونشن کے حوالے انتظامات کا جائزہ لیا گیا اور مرکزی کنونشن کو اس سال ان شاءاللہ  انتظامی اور معنوی لحاظ سے بہتر بنانے کا عزم کیا گیا ہے  چیئر مین کنونشن نے انتظامی دوستوں کے عزم کو سراہا اور اطمینان کا اظہار کیا ہے، اس اجلاس میں علامہ اصغر عسکری ،ڈاکٹر محمد یونس ، علامہ علی شیر انصاری کے علاوہ راولپنڈی اور اسلام آباد کی کابینہ اور وحدت یوتھ پاکستان  کے برادران نے بھر پور شرکت کی۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کا سالانہ مرکزی تنظیمی وتربیتی کنونشن 6-7-8اپریل 2018کو جامع امام صادق ؑ اسلام آباد میں منعقد ہوگا، اس بات اعلان مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ راجہ ناصرعباس جعفری نے مرکزی سیکریٹریٹ سے جاری ایک بیان  میں کیا ۔ انہوں نے کہاکہ تین روزہ مرکزی تنظیمی کنونشن میں ملک بھر سے اراکین شوریٰ عالی، اراکین مرکزی کابینہ ، اراکین صوبائی کابینہ اور ہر ضلع سے دس عہدیداران لازمی شرکت کریں گے۔

انہوں نے کہاکہ ملکی وبین الاقوامی حالات کے پیش نظر اس کنونشن کی اہمیت پہلے سے زیادہ بڑھ جاتی ہے، مرکزی سیکریٹری امور تعلیم نثارعلی فیضی کو مرکزی کنونشن کا کنوینئرنامزد کیا گیاہے، شرکائے کنونشن شرکت اور رابطے کیلئے مرکزی سیکریٹریٹ یا کنوینئرکنونشن سے رابطہ قائم کریں، بہترین کارکردگی کے حامل ماڈل اضلاع میں اعزازات تقسیم کیئے جائیں گے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی مرکزی سیکرٹری جنرل محترمہ سیدہ زہراء نقوی نے دسمبر کے آخری ہفتے میں لاہور ،اسلام آباد اور خیبرپختونخواہ کا دورہ کیا جہاں انہوں نے مہدی برحق ورکشاپس اور جشن صادقین کے پروگراموں میں شرکت کی ۔وہ اس سلسلے میں کراچی سے سنٹرل پنجاب ،اسلام آباد اور کے پی کےوزٹ پر آئیں تھیں۔ اسلام آباد میں انہوں ورکشاپ کے اختتام پر اپنے خطاب میں کہا کہ ان ورکشاپ کے انعقاد کا مقصد خواتین میں تنظیمی اور تربیتی شعور کو اجاگر کرنا ہے تاکہ خواتین معاشرے میں اپنا مثبت رول ادا کرسکیں اور تنظیمی امور میں اپنے مردوں کےشانہ بشانہ زندگی کے ہر شعبہ میں اپنی فعالیت کو اجاگر کر سکیں ۔ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی خواتین کارکنان ہماری تنظیم کا ایک قیمتی اثاثہ ہیں انہیں تنظیمی میدان فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ ان ورکشاپ کا انعقاد بے حد ضروری ہے ۔ امید ہے ان ورکشاپس کے انعقاد سے ہماری تنظیمی خواتین بھر پور استفادہ کریں گی ۔

انہوں نے کہا کہ ہماری تنظیمی خواتین  کے اصرار پر سال 2017 میں یہ پنجاب میں تیسری مرتبہ ورکشاپس منعقد ہو رہی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے کراچی اور اندرون سندھ میں اس سلسلے میں کئی ایک ورکشاپس کا انعقاد کیا جس سے وہاں کی خواتین نہ صرف مستفید ہوئی ہیں بلکہ انہوں نے عملی میدان بھی اپنا رول احسن طریقے سے نبھا رہی ہیں ۔ محترمہ سیدہ زہراء نقوی نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ہمیشہ ان ورکشاپس میں خواتین کی ایک کثیر تعدادنئی ممبر سازی کرتی ہے جو ایک خوش آئند اقدام ہے ۔ تیزی سے مجلس وحدت مسلمین پاکستان میں خواتین شمولیت ہمارے لئے باعث اطمینان ہے کہ معاشرے میں ہمارا رول ایک حوصلہ افزاء قدم ہے ۔ ہماری خواہش ہے کہ ہماری خواتین کارکنان  کسی بھی تنظیمی اور تربیتی میدان میں اپنے مردوں سے پیچھے نہ رہیں ۔ آج تک الحمدللہ اس سلسلے میں ہم کامیابی سے اپنے تنظیمی سفر کی جانب گامزن ہیں اور ان شاء اللہ آگے بھی اسی طرح ہر میدان میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتی رہیں گیں ۔

ان کامذید کہنا تھا کہ قائد وحدت اور مجلس وحدت کی معزز کابینہ کی جانب سے ہمیشہ ہمیں بہت ہی عزت ملی ہے جس کے لئے ہم اپنے قائد وحدت اور مسئولین کے شکر گزار ہیں کہ جنہوں نے ہم پر اعتماد کیا ہے اور ہمارے لئے تنظیمی میدان فراہم کیا ہے ۔ انہوں نےذمہ دار خواتین  سے گزارش کی کہ بلاتاخیر اپنے اپنے علاقوں فعالیت انجام دیں تاکہ آئندہ سیاسی میدان ہم ملت کی خدمت اور فلاح و بہبود کے لئے ایک زمینہ ہموار کرسکیں ۔ سیاسی میدان میں خواتین بہتر انداز میں اپنا رول ادا کرسکتی ہیں ۔ اور اپنے خاندان کے علاوہ محلے اور انتخابی حلقے میں اپنا مثبت رول انجام دے سکتی ہیں ۔ آج بھی ہماری خواتین  مردوں کے ہمراہ اسمبلیوں بھی اپنا سیاسی حصہ ڈال رہی ہیں اور ملک و ملت کی خدمت میں مصروف عمل ہیں ۔ آنے والے الیکشن میں ان شاء اللہ ہم پہلے سے بہتر ایک نئی حکمت عملی کے ساتھ میدان میں وارد ہوں گے ۔ تاکہ ہماری حکمت عملی گذشتہ کی نسبت مزید بہتر ہو ۔ ان شاءاللہ

وحدت نیوز(اسلام آباد) گذشتہ دنوں مسجد وامام بارگاہ باب العلم آئی ایٹ اسلام آبادمیں تکفیری دہشت گردوں کی فائرنگ سے شہید ہونے والے مجلس وحدت مسلمین کے سابق لیگل ایڈوائزر، سابق ایڈووکیٹ جنرل سندھ معروف قانون دان شہید سید محمد سیدین زیدی ایڈووکیٹ کو آہوں اور سسکیوں میں ایچ الیون قبرستان اسلام آبادمیں سپرد لحد کردیا گیا، تدفین میں مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ راجہ ناصرعباس جعفری  سمیت علامہ امین شہیدی، علامہ اقبال بہشتی، علامہ سخاوت قمی، محسن شہریار، ارشاد بنگش سمیت دیگر رہنما، معززین شہر اور پسماندگان کی بڑی تعداد شریک تھی، شہید سیدین زیدی کے تدفین کے موقع پر تلقین کی تلاوت علامہ راجہ ناصرعباس جعفری نے فرمائی، اس موقع پر انتہائی رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) اسلام آبادمیں نمازیوں پر فائرنگ کے نتیجے میں شہید ہونے والے ممتاز قانون دان شہید سید سیدین زیدی ایڈووکیٹ کے ایصال ثواب کے لئےمسجد باب العلم آئی ایٹ مرکز میں مجلس ترحیم کا انعقاد کیا گیا تھا ۔اس مجلس ترحیم میں اسلام آباد اور راولپنڈی کے مومنین کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی اس موقعہ پر شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کےسربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے شہید سید سیدین زیدی کی قومی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا،انہوں نے کہا کہ شہید سیدین زیدی ایک کریم اور نجیب انسان تھے ۔انسانی کرامت کا ایک اعلیٰ نمونہ تھے۔

علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے اپنے خطاب میں کہا کہ انسان اس دنیا میں ہمیشہ کے لئے نہیں آیا مگر جب جاتا ہے تو ہمیشہ کے لئے چلا جاتا ہے انسان موت وحیات کی سرحد پر کیسے پہنچتا ہے یہ انتخاب اس کا اپنا ہے کس کیفیت اور کس حال میں اپنے امام ؑ  کا دیدار کرتا ہے ۔اس کے لئے ہر مسلمان اور خصوصاً ہر مومن کو تیار رہنا چاہئیے ۔جو لوگ کریم ہوتے انہیں ایسے مقام و منصب نصیب ہوتے ہیں کرامت کا مفہوم بہت وسیع ہے ۔اللہ تعالیٰ کریم ہے اور جو بھی اس کی طرف سے آتا ہے وہ کریم ہے ۔ انبیاء کرام کریم ہیں ،ملائکہ کریم ہیں ،کتاب الہی کریم ہے ۔ کریم ایک کرامت کا قبیلہ ہے بس جس انسان کا ہدف الہی ہو جائےوہ کریم ہوتا ہے ۔ کریم اور کرامت بڑھائی (بزرگی) کا نام ہے ۔ کریم انسان پست نہیں ہوتا اس کی سوچ کریمانہ ہوتی ہے ۔ کریم انسان مظلوموں کا حامی اور ظالموں سے نفرت کرنے والا ہوتا ہے ۔ہمارے آئمہ اطہارؑ کریم تھے ۔ کریم باوقار ہوتا ہے ۔ داد رس اور ہمدرد ہوتاہے ۔

انہوں نے کہا کہ شہید سید سیدین زیدی امریکہ چھوڑ کر اپنے مظلوم عوام کی ہمدردی کے لئے پاکستان لوٹے تھے ۔ جب سانحہ راولپنڈی میں مظلوم مومنین کو بے گناہ اور بے بنیاد مقدمات میں گرفتار کیا گیا تو شہید سے رہا نہ گیا اپنی فیملی کی پرواہ کیے بغیر وطن واپس لوٹ آئے اور راولپنڈی کے مومنین کی دن رات بے لوث خدمت کی اور انہیں عدالتوں سے باعزت بری کرایا ۔ اللہ تعالیٰ نے انہیں اس رتبے اور مقام کے لئے منتخب کیا تھا آج وہ اس عظیم مقام جس کی آرزو انبیاء اور آئمہ کرام نے اپنی مناجات کی ہے ،پر فائز ہوئے۔ شہیدسید سیدین زیدی پوری شیعہ قوم کے لئے باعث فخر اور افتخار ہیں ۔شہیدکہتے تھے کہ امام خمینی ؒ اور امام سید علی خامنہ ای (حفظہ اللہ) کا راستہ عزت ووقار راستہ ہے اور شہید اسی راستے کے راہی تھے ۔شہید پیرو امام اور پیرو خط ولایت فقیہ تھے ۔ شہید کے اندر ایک بڑا پن اور مظلوموں کے لئے ہمیشہ تڑپ رہتی تھی ۔ شہید کے اندر قوم کا بے پناہ درد موجود تھا۔ان کی مذہبی خدمات کو کبھی فراموش نہیں کیا جا سکتا۔

انہوں نے مزید کہا کہ دہشت گردوں نے اس قوم کو اپنے ایک قیمتی اثاثے سے محروم کر دیا ہے،وہ ایک گھر کا شہید نہیں بلکہ پوری ملت کا شہید ہے ، ہم شہداء کے وارث ہیں ہم ان کے پاکیزہ خون کی لاج ضرور رکھیں گے ۔ پاکستان میں جتنے بھی شہید ہوئے ہیں وہ ملت پاکستان کا ایک عظیم اثاثہ ہیں ۔ہم اس سرمایہ عظیم کی حفاظت کریں گے اور کبھی بھی ان شہداء کو فراموش نہیں ہونے دیں گے ،ہمارا مطالبہ ہے کہ اس واقعہ میں ملوث افراد کو فوری طور پر بے نقاب کر کے سولی پر چڑھایا جائے۔ ہم ایک بیدار قوم ہیں اور اپنے حق کے لیے آواز بلند کرنا زندہ و بیدار قوموں کا خاصا ہے۔ ہم اپنے شہدا کے خون کاانصاف چاہتے ہیں۔ حکومت دہشت گردوں کے ساتھ مفاہمتی رویہ ترک کرے اور قانون وانصاف کے تقاضوں کے مطابق انہیں کیفر کردار تک پہنچائے۔

مجلس ترحیم سے شہید کے بیٹے سید مزمل حسین زیدی نے بھی خطاب کیا اور شہید کی زندگی کے مختلف پہلوں  پر  روشنی ڈالی اور کہا کہ میرے بابا کو اس لئے شہید کیا گیا کہ وہ ایک محب وطن باایمان اور مظلوں کے دادرسی تھے ، ہم پوری  فیملی اس بات کے گواہ ہیں کہ انہیں فیملی سے زیادہ مظلوموں اور محروموں  کی فکر رہتی تھی ان سے کوئی بھی ایک ملتا تو ان کا ہوکر رہ جاتا ہمیں اپنے بابا کی شہادت پر ناز ہے اور ہماری فیملی کو اتنے بڑے اعزاز اور رتبے پر فخر ہے ۔

Page 1 of 97

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree