وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین ضلع ملیر کا سال برائے 19-2018 کا آخری شوریٰ اجلاس ضلعی سیکریٹریٹ جعفر طیار سوسائٹی ملیر میں ضلعی سیکریٹری جنرل سید عارف رضا زیدی کی زیر صدارت منعقد ہوا اجلاس میں خصوصی شرکت ایم ڈبلیوایم کی مرکزی تنظیم سازی کونسل کے اراکین آصف رضا ایڈوکیٹ, علامہ علی انور جعفری, کراچی ڈویژن کے اراکین علامہ نشان حیدر ساجدی, زیشان حیدر, احسن عباس رضوی نے کی, اجلاس میں سال گذشتہ کی تنظیمی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا اور ایم ڈبلیوایم کھوکھراپار آرگنائزنگ کمیٹی کے قیام کا اعلان بھی کیا گیا, جبکہ مرکزی رہنما علامہ علی انور جعفری اور آصف رضا ایڈوکیٹ نے تنظیمی فعالیت اور ہماری زمہ داری کے عنوان پر گفتگو کرتے ہوئے ضلع ملیر کو اسلام آباد میں منعقدہ سالانہ مرکزی جانثاران امام عصر عج کنونشن میں شرکت کی دعوت دی. اجلاس میں ضلعی کابینہ سمیت تمام یونٹس کے سیکریٹری جنرل اور ڈپٹی سیکریٹری جنرل نے شرکت کی۔

وحدت نیوز(کراچی) سربراہ مجلس وحدت مسلمین علامہ راجہ ناصر عباس کے اعلان پر حالیہ پاک بھارت کشیدگی میں پاک افواج کے ساتھ اظہار یکجہتی اور ہندوستان کی جنگی جارحیت کی مذمت اور مقبوضہ کشمیر کے مظلوم عوام سے اظہار یکجہتی کیلئےمنعقدہ ملک گیریوم دفاع مادر وطن کے موقع پرایم ڈبلیوایم کراچی ڈویژن کی جانب سے جعفرطیار سوسائٹی تا مزارقائد براستہ محمود آبادموٹر سائیکل ریلی نکالی گئی،ریلی کے اختتام پر بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناحخ کے مزارکے سامنے تقریب تجدید عہد منعقد کی گئی جس سے ایم ڈبلیوایم کے رہنما سید علی حسین نقوی ،علامہ صادق جعفری، اہل سنت عالم دین شاہ فیروز الدین رحمانی اور مولانا عبداللہ جونا گڑہی نے خطاب کیا ۔

علی حسین نقوی کا مزا ر قائد کے سامنے تقریب تجدید عہد وفاسے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ دشمن کی گیڈر بھبکیوں کے جواب میں پاک فوج کے اقدام نے قوم کا مورال بلند کر دیا ہے اب اور بھی زیادہ حوصلے و جرت سے مقابلہ کرنے کو تیار ہیں ، پاکستان کو اس نازک اور اہم مرحلے پراندازہ ہو گیا ہے کہ دنیا میں ہمارے دوست اور دشمن ملک کون سے ہیں ۔جب تک ہم معاشی طور پرمضبوط نہیں ہونگے اور ہر معاملے میں قومی وقاراور مفاد کو مقدم نہیں رکھیں گئے ہمارے ساتھ کوئی بھی ملک کھڑ انہیں ہو گا ۔ہمیں ایک قوم بن کر ملک کی ترقی اور سربلندی کے لئے کوششیں کرنا ہوں گی، اس موقع پر ایم ڈبلیوایم کے رہنما ناصرالحسینی، احسن عباس رضوی، عارف رضازیدی، رضوان پنجوانی، حسن رضا سمیت کارکنان کی بڑی تعدادموجود تھی۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین کراچی کے ترجمان سید احسن عباس رضوی کی پی سی ایچ ایس کے علاقے میں ٹارگٹ کلنگ کے واقع میں شہید ہونے والے سید محمد علی شاہ کے قتل کی مذمت ، میڈیا سیل سے جاری اپنے مذمتی بیان میں انہوں نے کہاکہ شہر میں ٹارگٹ کلنگ کے بڑھتے ہوئے واقعات قانون نافذ کرنے اداروں کی کار کردگی پر سوالیہ نشان ہیں،حکومت ٹارگٹ کلنگ کے واقع کا فوری نوٹس لے،واقع میں ملوث سفاک دہشتگردوں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کرتے ہیں، مجلس وحدت مسلمین شہید محمد علی شاہ کے اہلخانہ کے غم میں برابر کی شریک ہے ۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین کے وفد کی صوبائی وزیر لیبر اور انسانی وسائل اور پاکستان پیپلز پارٹی ضلع ملیر کے صدر حاجی غلام مرتضیٰ بلوچ سے سندھ سیکریٹریٹ میں ملاقات ہوئی،جس میں یوسی 11جعفرطیار کے ضمنی بلدیاتی الیکشن اور علاقائی مسائل کے حوالے سے تفصیلی گفتگوہوئی، وفدمیں ایم ڈبلیوایم کراچی ڈویژن کے پولیٹیکل سیکریٹری میرتقی ظفر، سیکریٹری اطلاعات سید احسن عباس رضوی، ضلع ملیر کے سیکریٹری جنرل اور نامزد امیدوار برائےوائس چیئرمین یوسی 11 عارف رضا زیدی ، ضلعی پولیٹیکل سیکریٹری سید حسن عباس اور سیکریٹری فلاح وبہبود سعید رضا رضوی شامل تھے۔

وحدت نیوز (کراچی)  کے الیکٹرک کی ظالم انتظامیہ شہریوں کی جان کی دشمن بن چکی ہے، شدید گرمی میں بدترین لوڈشیڈنگ نے عوام کی زندگی عذاب بنا دی ہے، رات بھر اور صبح فجر تک ظالمانہ لوڈشیڈنگ نے شہریوں کا سکون غارت کردیا ہے، کے الیکٹرک کے مظالم پروفاقی اور صوبائی حکومت  کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے،کے الیکٹرک کی انتظامیہ اور سندھ حکومت نے ہوش کے ناخن نہ لئے، تووزیر اعلیٰ ہائوس اور کے الیکٹرک کے ہیڈ آفس کا رخ کریں گے، شدید گرمی میں بدترین لوڈشیڈنگ سے اگر کسی شہری کی جان خطرے میں پڑی، تو ذمہ دار کے الیکٹرک ہوگی، چیف جسٹس آف پاکستان اور آرمی چیف کے الیکٹرک کے اس غیر انسانی رویئے کا فوری نوٹس لیں، ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین کراچی ڈویژن کے رہنما احسن عباس رضوی، علامہ نشان حیدر، عارف زیدی اور سعید رضوی نے گلشن وقار جوگی موڑ تا آئی بی سی کے الیکٹرک بن قاسم تک احتجاجی ریلی اور مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر مظاہرین نےبینرز اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے،مظاہرین نے کے الیکٹرک کےخلاف شدید نعرے بازی کی اور شہر میں جاری ظالمانہ لوڈشیڈنگ کے فوری خاتمے کا مطالبہ کیا۔

مقررین نے کہا کہ غیر اعلانیہ اور بدترین لوڈشیڈنگ کے باعث شہری ذہنی کرب واذیت میں مبتلا ہیں، کے الیکٹرک کی ظالم انتظامیہ نے شہریوں کے سماجی ، تاجروں کے معاشی اور طلبہ کے تعلیمی مستقبل کو دائو پر لگا دیاہے، حکومت فوری طور پر شہریوں کو کے الیکٹرک کے ظلم سے نجات دلائے،کےالیکٹرک نے ماضی میں شدید گرمی اور لوڈشیڈنگ سے انسانی جانوں کے نقصان سے سبق حاصل نہیں کیا،کے الیکٹرک نے ہوش کے ناخن نا لیئے تو احتجاج کا دائرہ وسیع کردیا جائے گا، کےالیکٹرک نے شہریوں سے جینے کا حق بھی چھین لیاہے۔رہنمائوں نے کہا کہ کے الیکٹرک کی انتظامیہ بھاری بھرکم بلوں کی وصولی کے باوجود شہریوں کو بلاتعطل بجلی کی فراہمی میں ناکام ہے، ہمارے بچوں کا تعلیمی مستقبل داؤ پر لگا ہوا ہے، شدید گرمی میں بدترین لوڈشیڈنگ کے باعث معصوم بچوں اور بزرگوں کی طبیعت بگڑنے اور بے ہوشی کے واقعات میں اضافہ ہو گیا ہے ، چیف جسٹس آف پاکستان اور آرمی چیف کے الیکٹرک کے اس غیر انسانی رویئے کا فوری نوٹس لیں۔

وحدت نیوز  (کراچی)  مجلس وحدت مسلمین کراچی کے رہنماعلامہ مبشر حسن کا کہنا ہے کہ اکیس ارب میں فروخت کی جانے والی کے الیکٹرک اب ساتھ ہراز پانچ سو ارب روپے منافع کما چکی ہے۔آخر کیوں معاشی حب کراچی کی ایک کروڑ سے زائد صافین عوام کو پورے ملک میں سب سے زیادہ مہنگی فی یونٹ قیمت پر بجلی دی جارہی ہے۔85فیصد سے زائد ریکوری والے علاقوں کو میں آخر کیوں اعلانیہ و غیر اعلانیہ بلا جواز لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے اورکے الیکٹرک اوور بلنگ کے نام پراربوں روپے سے بھتہ وصول کر چکی ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نےصوبائی سیکریٹریٹ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر احسن عباس رضوی،عارف رضازیدی ،علامہ علی انورجعفری،ناصرحسینی،میر تقی ظفر،عون علی ،ثمرزیدی ، علی عباس زیدی سمیت دیگر رہنما موجود تھے۔

 انہوں نے کہا کہ گزشتہ 9 سالوں سے کے الیکٹرک کا آڈٹ نہیں ہوا تانبا چور،اووربلنگ ،میٹر ٹیمپرنگ سمیت دیگر طریقوں سے شہر کی عوام کو لوٹ رہی ہے و فاقی و صوبائی حکومتیں جواب دیں کے ایک نجی پرائیویٹ کمپنی کو سرکاری پولیس اسٹیشن کیوں اور کس بنیاد پر دیا گیا ہے ۔ عوام کو بجلی کے بلوں پر دھمکیاں لکھنا پولیس اہلکاروں کے زریعہ حراساں کرنے کا سلسلہ بند کیا جائے۔کے الیکٹرک سندھ حکومت سے سستی بجلی کیوں نہیں خریدتی گیس سے بجلی تیار کرنے والی بد دیانت کے الیکٹرک انتظامیہ عوام کو لوٹنے کا سلسلہ بند کرے کے الیکٹرک کی نجکاری شہر قائد کی عوام کے ساتھ زیادتی ہے جس کی پر زور مذمت کرتے ہیں ۔

علامہ مبشر حسن کا کہنا تھا کہ پاکستان کی تاریخ میں آج تک کسی کمپنی نے ایک وقت میں ساڑھے پانچ ہزار ملازمین کو جبری طور پر نہیں نکالا۔ کے الیکٹرک انتظامیہ کی جانب سے نکالے جانے  والے ساڑھے پانچ ہراز ملازمین کے ساتھ ہیں شہر کی عوام کو مذید معاشی بدحالی اور بے روزگای کی طرف دھکیلا جارہا ہے انتظامیہ کے اس ظالمانہ اقدام کی مذمت کرتے ہیں ہم صدر مملکت ،وزیر اعظم پاکستان صوبائی وزیر اعلی سمیت چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار ،آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ  سے مطالبہ کرتے ہیں کہ کے الیکٹرک کو فوری قومی تحویل میں لیا جائے۔ قومی احتساب ادارے نیب کے زریعہ ادارے میں موجود کرپٹ انتظامیہ کے خلاف فوری کاروائی کرے گزشتہ 9 سالوں سے کے الیکٹرک کا آڈٹ نہیں ہوا فوری آڈٹ کیا جائے اور ادارے میں موجود کرپٹ آفسران کے خلاف کاروائی کی جائے۔

انہوں نے مزید کہاکہ کے الیکٹرک گیس کمپنی کے اربوں روپے کے واجبات ادا کرے پیٹرول پر بجلی پیدا کرے۔ اوور بلنگ کے نام پر مذید بھتہ خوری بند کی جائے۔شہر قائد کو بلا تعطل بجلی فراہم کی جائے۔اس حوالے سے مجلس و حدت مسلمین نے کے الیکٹرک کے خلاف مرحلہ وار مہم کا آغاز کر دیا ہے اور پہلے مرحلہ کے الیکٹرک کے خلاف عوام کی آگاہی کیلئے تشہیری مہم کے حوالے سے شہر میں بینرز آویزہ کر دیئے گئے ہیں۔دوسرے مرحلے میں شہر قائد کے مختلف اضلاع میں کے الیکٹرک انتظامیہ کے خلاف احتجاج کیا جائے کا اور شہر بھر میں بلا وجہ لوڈشیڈنگ اور اووربلنگ سمیت دیگر شکایات کے حوالے سے احتجاجی کیمپ لگائے جائیں کے جس میں عوام اپنی شکایات درج کر وا سکیں گے۔شہر کی عوام کوظالمانہ اقدامات پر قانونی تحفظ فراہم کرنے کیلئے عدلیہ میں بھی جایا جائے گا۔

Page 1 of 9

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree