وحدت نیوز(اسلام آباد) حالیہ گرفتاریوں کو سیاسی انتقام کا الزام دےکر اپوزیشن عوام کی آنکھ میں دھول جھونکنے کی کوشش کر رہی ہے،یہ کیسسز انہی جماعتوں کا اپنے اپنے ادوار میں ایک دوسرے پر بنائے ہوئے کیسسز ہیں، اپوزیشن حقیقی عوامی مسائل کی بجائے کرپٹ عناصر کو بچانے کی مہم پر لگ چکی ہے عوام کرپٹ عناصر سے قومی دولت کی واپسی کے منتظر ہیں ان خیالات کا اظہار مرکزی سیکریٹری سیاسیات مجلس وحدت مسلمین سید اسد عباس نقوی نے میڈیا سیل سے جاری بیان میں کیا۔

 انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی کرپشن کے خلاف اقدامات کی تائید کرتے ہیں ۔ضرورت اس امر کی ہے کہ کرپٹ عناصر کے خلاف بلاتفریق کاروائی کی جائے ۔ ملکی دولت اور وسائل کی لوٹ مار نے آج پاکستانی قوم کو مشکلات سے دوچار کر رکھا ہے ۔ کرپشن اور کرپٹ عناصر کے خلاف حکومت کو سخت اقدامات کرنا ہونگے ۔

انہوںنے مزید کہاکہ وطن عزیز کی معیشت کو کرپشن نے کھوکھلا کردیا ہے اس ناسور کے خلاف حکومت کو نچلی سطح سے آگاہی مہم شروع کرنا ہو گی علما کرام کو بھی کردار ادار کرنا ہوگااور تعلیمی نصاب میں کرپشن کے خلاف مضامین شامل کئے جائیں تاکہ معاشرے میں کرپشن سے نفرت پیدا ہو ۔

وحدت نیوز(جیکب آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی رہنما علامہ مقصودعلی ڈومکی نے کہا ہے کہ طاقتور لوگوں کا احتساب اور قانون کی بالادستی ضروری ہے مگر یہ احتساب غیر جانبدارانہ ہونا چاہئے جنہوں نے قومی دولت کودونوں ہاتھوں سے لوٹاان کو انصاف کے کٹہرے میں لانا از حدضروری ہے۔                    

انہوں نے کہا کہ وہ معاشرہ کبھی فلاح نہیں پاسکتا، جہاں غریب اور امیر کے درمیان قانون جدا ہو، پاکستان میں قانون کی حکمرانی بے حد ضروری ہے۔ عوام توقع رکھتی ہے کہ حکومت سادگی اورکفایت شعاری کو اپناتے ہوئے حکمرانوں کی شاہ خرچیوں کا سد باب کرے گی۔ ایوان صدر میں حال ہی میں جن شاہ خرچیوں کے اشتہارات دیئے گئے اس پر حیرت ہے۔ وزیراعظم ہاؤس کی بھینسیں بیچنے والے،  لاکھوں روپے طوطوں اور پنجروں پر خرچ کریں گے، یہ ناقابل قبول اقدام ہے۔               

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں کرپشن اور دھشت گردی دو بڑے مسائل ہیں مگر آج بھی کالعدم دھشت گرد جماعتوں کو کھلی چھوٹ حاصل ہے،جو ملک میں نفرت اور انتشار پھیلا رہے ہیں۔ اسی ہزار شہداء کے وارثوں اور پوری قوم کا مطالبہ ہے کہ جنہوں نے ملک میں نفرت اوردھشت گردی کو فروغ دیا انہیں جیلوں میں بند کیا جائے اور دھشت گرد گروہوں اور ان کے سہولت کاروں کے خلاف بھرپور اقدامات کئے جائیں۔ آج حضرت قائداعظم ؒاورحکیم الامت حضرت علامہ اقبال ؒکے پاکستان کو دھشت گرد گروہوں اور نفرت اور تعصب کے علمبردار عناصر سے خطرہ ہے۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) قومی دولت لوٹنے والوں سے پائی پائی کا حساب لیا جائے، فلیگ شب ریفرینس میں تحقیقاتی ا داروں کے کردار نے مایو س کیا ،ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے سربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے میڈیا سیل سے جاری بیان میں کیا، انہوں نے کہا کہ جے آئی ٹی کا بڑے مگرمچھوں کے خلاف مظبوط ثبوت مہیا نا کر سکنا تحقیقاتی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشاں ہے ۔ پاکستان لوٹنے والوں کواگر اسی طرح ڈھیل دی جاتی رہی تو ملک کو دوالیہ ہونے سے بچانا ناممکن ہو گا۔ احتساب کا عمل بلا امتیاز سب کے لئے ایک جیسا چاہتے ہیں احتساب کا عمل بے رحمانہ ہونا چاہئے۔ قومی دولت کے لٹیروں سے پائی پائی کا حساب لینا ہو گا۔ تحریک انصاف کی حکومت کرپٹ عناصر کے خلاف کام کرنے والے اداروں کے ہاتھ مظبوط کرے اور انہیں اس حوالے سے درپیش مسائل کو دور کرنے کے لئے قانون سازی کرئے ۔ قومی مجرموں کا ڈٹ کر مقابلہ کرئے عوام ساتھ دے گی۔وطن عزیز کی ترقی کے لئے ملک کو لوٹنے والے مافیاز سے نجات حاصل کرنا ناگزیر ہو چکا ہے ۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) جمہوری روایات کے علمبراد بھی جمہوری حکومت کو گرانے کی باتیں کر رہے ہیں جب بھی اشرافیہ کا احتساب ہوتا ہے جمہوریت اور ملکی سلامتی کو خطرات لاحق ہو جاتے ہیں۔ملکی دولت لوٹنے والوں کا بلاامتیاز احتساب کیاجائے۔ ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے سربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے میڈیا سیل سے جاری بیان میں کیاانہوں نے کہا کہ سندھ میں براجمان جماعت وفاقی حکومت کی ٹانگیں کھینچنے کی بجائے صرف کراچی شہرکوصاف پانی اور اسکا کوڑا ہی صاف کر دے تو عوام انہیں کاندھوں پر بیٹھے گی غریب عوام کی خون پسینے کی کمائی کو دونوں ہاتھو ں سے لوٹنے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں ہو سکتے ،کرپٹ عناصر پھر کسی این آر او کے تلاش میں ہیں کرپٹ عناصر کے خلاف قانونی کاروائیا ں عوامی امنگوں کے مطابق ہے ۔ عدلیہ اور نیب کی کرپشن کے خلاف اقدامات کی بھر پور تائید کرتے ہیں ۔عوام عدلیہ اور نیب کے فیصلوں کے پیچھے کھڑی ہے ۔

وحدت نیوز(کوئٹہ) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی رہنما اور صابق وزیر قانون بلوچستان سید محمد رضا (آغا رضا) نے کرپشن کو ملک کی پسماندگی کی اصل وجہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ جب تک کرپشن رہے گی ملک میں عادلانہ نظام قائم نہیں ہو سکتا۔کرپٹ عناصر ملک کو اقتصادی طور پر کھوکھلا کر دیتی ہے۔کوئی بھی شخص چاہے کتنا ہی طاقتور کیوں نہ ہو، ان سے قوم کی لوٹی ہوئی دولت واپس لیا جائیں،احتسابی عمل اعلیٰ اداروں سے شروع ہونا چاہئے اوپر سے نیچے تک سب کا بلا امتیاز احتساب ہونا چاہیئے تاکہ بہتر سے بہتر نتائج مل سکے،اگر ہم ملک میں اچھے نظام کے خواہاں ہیں تو اپنے درمیان سے کرپشن کا مکمل طور پر خاتمہ کرنا ہوگا۔

 انہوں نے کہا کہ روز اول سے پاکستان کے استحکام کو مد نظر رکھا جاتا کرپشن کرنے والوں کو سزائیں دی جاتی تو آج حالات بیت مختلف ہوتا۔ماضی میں احتساب کرنے والے اداروں کو آزادانہ فیصلے کرنے دیتے تو آج کرپشن کا خاتمہ یو چکا ہوتا۔لیکن افسوس کہ آج وطن عزیز کی اقتصادی حالت مخدوش ہے کرپشن کرنے والے عناصر کے جرائم میں ہر وہ شخص برابر کے شریک ہیں جس نے اس کی راہ میں رکاؤٹ بننے کے بجائے رضامندی اور خاموشی اختیار کی۔ جس طرح دہشتگردوں کے خلاف موثر کاروائیوں سے ملک کی مجموعی سکیورٹی حالات پہلے کی نسبت قدرے بہتر ہے اسی طرح بدعنوان عناصر کے خلاف بھی سخت قانونی کاروائیاں عمل میں لائی جائیں ان تمام بد عنوان کرپٹ عناصر کو عدالت کے کٹہرے میں کھڑا کیا جائیں جو کرپشن میں ملوث ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہمارا قانون بدعنوانی کے خلاف ہے، جو افراد آئین شکنی کرکے دوسروں کا حق کھائے نہ صرف ان سے حساب لیا جائیں بلکہ انہیں سزائیں بھی ملنی چاہئے،احتسابی عمل کے دائرہ کار کو وسیع کرتے ہوئے تمام محکموں اور اداروں میں موجود کالی بھیڑوں کے خلاف بلاامتیاز احتساب کا عمل شروع کیا جائے۔ ایماندار اور کرپشن سے پاک کوئی بھی فرد احتساب کے عمل کے خلاف نہیں ہوسکتا، تمام سیاسی جماعتوں کو چاہئے کہ احتسابی عمل کی تائید کریں۔

سابق وزیر قانون سید محمد رضا نے کہا کہ کرپشن ملکی ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاؤٹ ہے، جب تک ملک میں عدل و انصاف سے کام نہیں لیا جائے گا ملک ترقی نہیں کر سکے گی، بدعنوانی کی وجہ سے ہمارا ملک معاشی طور پر کمزور ہوچکی ہےاور اسی صورت ہم ملک کو اقتصادی طور پر مضبوط کر سکتے ہیں۔ کرپٹ عناصر چاہے کتنے ہی بااثر کیوں نہ ہوں ان سے کوئی رعایت نہیں برتی جانی چاہئے۔ دہشت گردی اور کرپشن نے اس ملک کی بنیادوں کو کھوکھلا کر کے رکھ دیا ہے، کرپشن کے خلاف بھی فیصلہ کن کاروائی ملک کی سالمیت و استحکام کے لئے ازحد ضروری ہے۔

وحدت نیوز (کوئٹہ) مجلس وحدت مسلمین کوئٹہ ڈویژن کے سیکریٹری جنرل عباس علی نے کرپشن کو ملک کی پسماندگی کی اصل وجہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ جب تک کرپشن رہے گی ملک میں عادلانہ نظام قائم نہیں ہو سکتا۔کرپٹ عناصر ملک کو اندرونی طور پر کھوکھلا کر دیتی ہے ، اگر ہم ملک میں اچھے نظام کے خواہاں ہیں تو اپنے درمیان سے کرپشن کا مکمل طور پر خاتمہ کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح آج ادارے اور عدلیہ اپنا کردار ادا کررہے ہیں اگر روز اول سے پاکستان کے استحکام کو مد نظر رکھا جاتا اور کرپشن کو ختم کرنے کیلئے عدلیہ اور کرپشن کے خاتمے پر فائز حکومتی ادارے اپنا مثبت کردار ادا کرتے تو آج وطن عزیز کی حالت موجودہ حال سے مختلف ہوتی ۔

انہوں نے کہا کہ کرپٹ عناصر کو جنم دینے میں ہر وہ شخص ملوث ہے جس نے اس کی راہ میں رکاؤٹ بننے کے بجائے رضامندی اور خاموشی اختیار کی۔ جس طرح دہشتگردوں کے خلاف کاروائیاں کی جاتی ہے لازم ہے کہ بدعنوان عناصر کے خلاف بھی کاروائی کی جائے اور ان تمام حکومتی افسران کو انصاف کی عدالت میں کھڑا کیا جائے جو کرپشن میں ملوث ہیں، کوئی بھی شخص چاہے کتنا ہی طاقتور کیوں نہ ہو، اسے انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہمارا قانون بدعنوانی کے خلاف ہے، جو افراد آئین شکنی کرکے دوسروں کا حق کھائے انہیں ان کاموں کی سزا بھی ملنی چاہئے،احتسابی عمل کے دائرہ کار کو وسیع کرتے ہوئے تمام محکموں اور اداروں میں اسے بلاامتیاز شروع کیا جائے۔ ایماندار اور کرپشن سے پاک کوئی بھی فرد احتساب کے عمل کے خلاف نہیں ہوسکتا، تمام سیاسی جماعتوں کو چاہئے کہ احتسابی عمل کی تائید کرے۔

ان کامذیدکہناتھا کہ کرپشن ملکی ترقی کی راہ میں بڑی رکاؤٹ ہے، جب تک ملک میں عدل و انصاف سے کام نہیں لیا جائے گا ملک ترقی نہیں کر سکے گی، بدعنوانی کی وجہ سے ہمارا ملک معاشی طور پر کمزور ہوا۔ احتسابی عمل اعلیٰ اداروں سے شروع ہونا چاہئے اور اوپر سے نیچے کی طرف لایا جائے اس طرح کرپشن کے خلاف جنگ میں ہمیں بہتر نتائج مل سکتے ہیں اور اسی صورت ہم ملک کو اقتصادی طور پر مضبوط کر سکتے ہیں۔ کرپٹ عناصر چاہے کتنے ہی بااثر کیوں نہ ہوں ان سے کوئی رعایت نہیں برتی جانی چاہئے۔ دہشت گردی اور کرپشن نے اس ملک کی بنیادوں کو کھوکھلا کر کے رکھ دیا ہے، کرپشن کے خلاف بھی فیصلہ کن کاروائی ملک کی سا  لمیت و استحکام کے ازحد ضروری ہے۔

Page 1 of 3

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree